اردو شاعری

مجھ سے وہ خفا ہے اور دل مجھ سے خفا ہے

تیری آنکھوں سے ہمیں عشق ہوا

عشق اور بندگی کے آنسو ہیں

جو محبت میں درد پاتے ہیں

آگ لگی ہے روح کے دھاگے میں

ظلم کرتی ہے جب مجھپے تنہائی

داستاں آنکھوں میں رہ جائے

ہم تو اب غیر ہیں انکے لئے

اس قدر دل کو سجا نہ دو

کسی دامن کا کیا بھروسہ ہے

آج کی رات برسیگا رات بھر

Advertisements

Leave a Reply