ظلم کرتی ہے جب مجھپے تنہائی


بےوفا ہو گیا ہے درد مجھی سے

دور کا رشتہ ہو گیا خوشی سے

 

ایک بادل کا ٹکڑا اڑتا تھا

ہم نے برستے دیکھا اسے بے بسی سے

 

کوئی کشتی جب کنارے لگتی ہے

وہ ٹھہرتی ہے کتنی خاموشی سے

 

ظلم کرتی ہے جب مجھپے تنہائی

قتل کرتا ہوں اپنی بےخودی سے

جو محبت میں درد پاتے ہیں

آگ لگی ہے روح کے دھاگے میں

Advertisements

कमेंट्स यहां लिखें-

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google photo

You are commenting using your Google account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

Connecting to %s